fbpx

Type to search

مراد سعید کی سو روزہ کارکردگی پر پریس کانفرنس

مراد سعید کی سو روزہ کارکردگی پر پریس کانفرنس

Share

ریاست و مواصلات کے وزیر مراد سعید نے منگل کو یہ دعوی کیا ہے کہ قومی ہائی وے اتھارٹی نے حکومت کے پہلے 100 دنوں کے دوران اس کے لئے مقرر کردہ اہداف حاصل کر لیے ہیں-

ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ این ایچ اے نے بہت سارے سادگی کے اقدامات لے کے 3.72 بلین روپے کی آمدنی کی، جس میں گاڑیوں کی نیلامی اور زمین کا دوبارہ حصول شامل ہیں۔

تاہم، این ایچ اے نے ابھی تک انتہائی مالی بحران کا سامنا کیا ہے اور اس کے تمام اہم منصوبوں (بشمول چین-پاکستان اقتصادی کوریڈور کے تحت) کو بھی 40 ارب روپے کی بقایا رقم کی غیر ادائیگی کی وجہ سے ٹھیکیداروں کی طرف سے روک دیا گیا ہے۔

وزیر ریاست و مواصلات مراد سعید

مراد سعید نے کانفرنس میں بتایا کہا اعلی حکمرانی کی وجہ سے اقتدار میں 1،412 ملین روپے کی آمدنی پیدا ہوئی، غیرمعمولی کارروائیوں کے خلاف مہم میں 1596 لاکھ روپے، سرکاری گاڑیوں کو نیلامی سے 208.8 ملین روپے، اخراجات میں کمی سے 36.1 ملین روپے اور آڈٹ کے سلسلے میں 468.2 ملین روپے کی آمدنی ہوئی۔

مراد سعید نے کہا کہ ہم نے سادگی اختیار کرتے ہوئے مہمانوں کی خدمت میں چائے کے ساتھ لوازمات کے تفریحی بل کا خاتمہ کیا ہے جبکہ پریس کانفرنس کے بعد این۔ایچ۔اے کے حکام اور میڈیا کے گروپوں کے لیے چائے اور لوازمات سے خدمت کی گئی۔

این ایچ اے کے ٹھیکیداروں نے مئی سے ادائیگی نہیں کی ہے اور نگراں حکومت نے جاری کردہ چیکز اسی مہینے میں بنے ہیں۔ ایک مہینہ قبل، حکومت نے این ایچ اے کے لئے 80 کروڑ میں سے 40 کروڑ کی ذمہ داری لی ہے اور ابھی دوسرا حصہ کی ادائیگی رہتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ای ٹینڈرنگ، ای بیڈنگ اور ای بلنگ کی سہولیات کو متعارف کرایا گیا ہے اور پاکستان کے آڈیٹر جنرل کے منصوبوں کی خصوصی آڈٹ اور نیشنل ہائی وے فاؤنڈیشن کی زمین حاصل کرنے کی تحقیقاتی منصوبوں میں شفافیت کو یقینی بنایا جائے گا۔

مراد سعید نے کہا کہ سبز پاکستان کی مہم جو کہ عمران خان نے شروع کی ہے اس میں 187000 مختلف پودے پورے پاکستان میں لگائے گئے ہیں اور ناران کاغان میں دو ریسٹ ہاوس کو تفریح گاہ میں بدل دیا گیا ہے تا کہ آمدنی ہو۔

ایک صحافی نے پوچھا کہ کیوں اسلام آباد-لاہور موٹر وے (ایم -2) کے ایک معاہدے کے ذریعے علاقوں میں غیر قانونی تعمیرات کے خلاف کارروائی نہیں کی جا رہی تھی؟ جس کے جواب میں وزیر مراد سعید نے کہا کہ “جو کچھ بھی ہم نے کیا ہے وہ ایک چھوٹی چیز نہیں ہے۔ ہم مستقبل میں دیگر غلط استعمالیات کے خلاف بھی کاروئی کریں گے۔”

شراکت دار: صائمہ نعیم

Tags::

You Might also Like